پھر آنے لگیں شہر محبت کی ہوائیں

0
430
Phir-Aane-Lagein-Shehr-e-Mohabbat-ki-Hawain
Phir Aane Lagein… || …پھر آنے لگیں

پھر آنے لگیں شہر محبت کی ہوائیں
پھر پیش نظر ہو گئیں جنت کی فضائیں

اے قافلے والو! کہیں وہ گنبد خضرا
پھر آئے نظر ہم کو کہ تم کو بھی دکھائیں

ہاتھ آئے اگر خاک تیرے ؐ نقش قدم کی
سر پر کبھی رکھیں کبھی آنکھوں سے لگائیں

نظارہ فروزی کی عجب شان ہے پیدا
یہ شکل و شمائل ، یہ عبائیں، یہ قبائیں

کرتے ہیں عزیزان مدینہ کی جو خدمت
حسرت انہیں دیتے ہیں وہ سب دل سے دعائیں

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here