درِ نبی ﷺ پر یہ عمر بیتے ہو ہم پہ لطفِ دوام ایسا

0
131
Dar-e-Nabi-Per-Ye-Umer-Betay
درِ نبی ﷺ پر یہ عمر بیتے ہو ہم پہ لطفِ دوام ایسا

درِ نبی ﷺ پر یہ عمر بیتے ہو ہم پہ لطفِ دوام ایسا
مدینے والے کہیں مقامی ہو اُن کے در پر قیام ایسا

یہ رفعتِ زکرِ مصطفیٰ ﷺ ہے نہیں کسی کا مقام ایسا
جو بعد زکرِ خدا ہے افضل ہے زکرِ خیرالانام ایسا

جو غمزدوں کو گلے لگا لے بروں کو دامن ميں جو چھپا لے
ہے دوسرا کون اِس جہاں میں سوائے خیرالانام ایسا

بلال تجھ پر نثار جاؤں کے خود نبی ﷺ نے تجھے خریدا
نصیب ہو تو نصیب ایسا غلام ہو غلام ایسا

مجھی کو دیکھو وہ بےطلب ہی نوازتے جا رہے ہیں پیہم
نہ میرا کوئی عمل ہے ایسا ، نہ میرا کوئی ہے کام ایسا

لبوں پہ نام ِ نبیﷺ جب آیا، گُریزپا حادثوں کو پایا
جو ٹال دیتا ہے مُشکلوں کو میرے نبیﷺ کا ہے نام ایسا

نماز اقصٰی میں جب پڑھائی تو انبیاء اور رُسُل یہ بولے
نماز ہو تو نماز ایسی امام ہو تو امام ایسا

ہیں جتنے عقل و خِرَد کے دعوے ، کب اُن کی گرد ِ سفر کو پہنچے؟
کوئی بھی اب تک سمجھ نہ پایا ، ہے مصطفیٰﷺ کا مقام ایسا

میں خالد اپنے نبی ﷺ پہ قربان ہے جن کا خُلقِ غظیم قرآں
ہے روشنی جس کی دو جہاں میں کہیں ہے ماہِ تمام ایسا

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here